HR Violation

روالپنڈی: زیر حراست نوجوان پولیس تشدد سے ہلاک‘ مشتعل اہلخانہ کا تھانہ کا گھیرائو

راولپنڈی (اپنے سٹاف رپورٹر سے) تھانہ گنج منڈی میں زیر حراست نوجوان پولیس تشدد سے جاں بحق ہو گیا۔ نوجوان کی موت کی اطلاع ملنے پر مشتعل اہلخانہ نے تھانے کا گھیرائو کرلیا، خواتین اور بچے زارو قطار روتے رہے، نوجوانوں نے تھانے کا بورڈ توڑ ڈالا سی پی او راولپنڈی اسرار عباسی نے ایس پی راول ڈویژن بہرام خان کی سربراہی میں انکوائری کمیٹی بنادی۔تھانے کے باہر احتجاج کرنے والوں نے بتایا کہ 23 سالہ ریحان عرف سانو کو پولیس اس کے گھر ورکشاپی محلہ سے شراب فروشی کے الزام میں گرفتار کرکے تھانے لائی جس پر رات بھر تشدد ہوا تو اسے ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز ہسپتال لے گئے جہاں وہ جاں بحق پایا گیا پولیس کا موقف ہے کہ ریحان سے کپی شراب برآمد ہوئی تھی جبکہ رات کو اسے سینے میں تکلیف محسوس ہوئی تو اسے ہسپتال لے گئے جہاں وہ جاں بحق ہوگیا جبکہ ہسپتال میں ورثاء نے ریحان عرف سانو کی کمر پر لوہے کے راڈوں سے تشدد کے نشانات دیکھے اور ان نشانات کی تصاویر بھی بنائیںایس ایچ او طاہر عباس نے بتایا کہ ریحان کو اے ایس آئی عتیق نے شراب کی بوتل کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔ تھانے کے گھیرائو کے موقع پر گنجمنڈی روڈ پر شدید ٹریفک جام ہوگیا جبکہ مظاہرین کو کنٹرول کرنے کیلئے تھانہ رتہ امرال اور تھانہ سٹی پولیس کی بھی مدد طلب کرلی ۔